حادثے ایک دم نہیں ہوتے

پینٹنگ میرا بچپن کا شوق تھا۔ جب میں اسکول میں تھا تو جاپانی ایمبیسی کے زیر انعقاد ایک پینٹنگ کمپٹیشن میں میری بنائی گئی ایک تصویر کو پہلا انعام اور مجھے بطور اعزاز آٹھ سو ڈالرز دیے گئے تھے۔ وہ ڈالرز میری ٹیچر نے خود رکھ لیے تھے ، اور وہ پینٹنگ مجھے کبھی واپس نہیں ملی کیونکہ وہ میرے پرنسپل کی بیٹی کو بہت پسند آ گئی تھی۔ سو پرنسپل صاحب نے وہ اسے گفٹ کر دی۔
کوئی انسان یونہی دنیا سے بے اعتبار، بدگمان اور شکی مزاج نہیں بن جاتا۔ یہ اس قسم کی چھوٹی چھوٹی باتیں ہوتی ہیں جو ہم پر بہت گہرا نفسیاتی اثر چھوڑتی ہیں۔

مہر النساء از نمرہ احمد

Advertisements

One thought on “حادثے ایک دم نہیں ہوتے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s