کچھ دل سے ۔۔۔ مالکِ کُل، خدائے ہست و بود

مالکِ کُل، خدائے ہست و بود
مظہر عالمِ وجود و شہود
ہر تخیل سے ماورا ہے تو
ہر تخیل میں ہے مگر موجود
مالکِ کل، خدائے ہست و بود
تیرا ادراک غیر ممکن ہے
عقل محدود، تو ہے لا محدود
مالکِ کُل، خدائے ہست و بود
فرض ہے تیری بندگی سب پر
ہے حقیقت میں اک تو ہی معبود
مالکِ کُل، خدائے ہست و بود
ہے یہ اعجاز تیری قدرت کا
ہر جگہ ہے ، کہیں نہیں موجود
مالکِ کُل، خدائے ہست و بود
مظہر عالمِ وجود و شہود
تبصرے میں اپنی رائے کا اظہار کریں

via Blogger http://ift.tt/2vbhk9g

Advertisements

One thought on “کچھ دل سے ۔۔۔ مالکِ کُل، خدائے ہست و بود

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s